Home / لمپی اسکن : ملک میں بیف کی طلب میں کمی

لمپی اسکن : ملک میں بیف کی طلب میں کمی

Beef sale decreased after lumpy skin disease

ویب ڈیسک ۔۔ جانوروں میں لمپی اسکن کی بیماری کے باعث ملک بھرمیں بیف کی فروخت میں نمایاں کمی دیکھی جارہی ہے۔

میٹ مرچنٹ ایسوسی ایشن کےمطابق بیماری کے بعد گوشت کی فروخت صرف 30 فیصد رہ گئی ہے۔ بیماری سےپہلےیومیہ تین سے پانچ ہزار بڑے جانور ذبح ہوتےتھےجواس وقت ایک ہزار سے بھی کم جانور ذبح ہو رہے ہیں۔

لمپی اسکن وائرس نامی بیماری گذشتہ ایک صدی سے جانوروں میں تشخیص ہورہی ہے جو جانوروں میں چکن پاکس یا چیچک جیسی ہی بیماری ہے۔

ماہرین کے مطابق اس بیماری کی تشخیص 1929 میں پہلی مرتبہ افریقہ میں پائی گئی تھی جس کے بعد بھارت، سری لنکا اور انڈونیشیا میں بھی اس بیماری کی تشخیص ہوئی۔

ماہرین کے مطابق دنیا بھر سے ٹرانسپورٹ کے ذریعے جب پھل اور دیگر اجناس کی تجارت ہوتی ہے تو اس کے ساتھ مکھیاں اورمچھر بھی آ جاتے ہیں جو خطے میں موجود بیماریوں کے پھیلاؤ کا سبب بنتے ہیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ ان مکھیوں اور مچھروں میں خون چوسنے والی مکھیوں، ایڈیز نامی مچھر جو زرد بخار اور ڈینگی وائرس جیسے امراض کے پھیلاؤ کا سبب بنتا ہے وہ لمپی اسکن ڈیزیز کے وائرس کے پھیلاؤ کا بھی سبب بھی بنتے ہیں۔

یہ بھی چیک کریں

Salman Rushdi Maloon

ملعون رشدی گونگااورکاناہوگیا۔شاباش ہادی مطر

ویب ڈیسک ۔۔ کہتےہیں بکرےکی ماں کب تک خیرمنائےگی ۔۔ یہی حال شاتم رسول ملعون …