Home / مسلمان نہ بنتی تومرجاتی : برطانوی پارٹی گرل کی رلادینےوالی داستان

مسلمان نہ بنتی تومرجاتی : برطانوی پارٹی گرل کی رلادینےوالی داستان

Persephone, party girl who embraced Islam

ویب ڈیسک ۔۔ اسلام قبول نہ کرتی توکب کااپنی زندگی کاخاتمہ کرچکی ہوتی ۔

برطانیہ کےنائٹ کلبوں میں پارٹی گرل کےطورپرجانےوالی پرسیفون نامی خاتون نےاپنےقبول اسلام کی کہانی سناتےہوئےجذباتی اندازمیں کہاکہ اپنی گناہوں سےبھری اورذلت بھری زندگی سےتنگ آچکی تھی،کئی باراپنی جان خودلینےکافیصلہ کیالیکن خداکوکچھ اورہی منظورتھا۔

برطانوی نشریاتی ادارےسے بات کرتے ہوئے پرسیفون نےنائٹ کلبوں میں رقص کرنے کے دوران لوگوں کی بدسلوکی اوراذیتوں کا زکر کرتے ہوئے کہا کہ ان کی زندگی پوری طرح ذلت میں ڈوبی ہوئی تھی ۔ رات رات بھر شراب میں دھت لوگوں کی رقص و سرود کی محفلوں میں گزرتی تھی۔

پرسیفون نے بتایا کہ اس نےتنگ آخربارکی نوکری چھوڑی اورایک کال سینٹر میں جاب کی جہاں اس کی ملاقات حلیمہ نامی مسلمان خاتون سے ہوئی،جس کےبعدمیری زندگی یکسربدل گئی ۔

پرسیفون کےمطابق اس نےمسلمانو ہونےسےپہلےحلیمہ کے ساتھ روزہ رکھا۔ یہ ایک بہترین روحانی احساس تھا جس کے بعد میں دین کی جانب کھنچتی چلی گئی اورپھرمیں نے حجاب کرنا شروع کردیا اوراب الحمد اللہ میں مسلمان ہوں۔

یہ بھی چیک کریں

New criminal code in UAE

یواےای میں غیرازدواجی تعلقات جائزقرار

ویب ڈیسک ۔۔ متحدہ عرب امارات میں حکومت کےاصلاحاتی پروگرام کےتحت متعددقوانین میں تبدیلیاں لائی …