Home / ہریانہ: کھلی جگہ پرنمازجمعہ کی ادائیگی پرپابندی

ہریانہ: کھلی جگہ پرنمازجمعہ کی ادائیگی پرپابندی

Friday prayers banned in open spaces in Haryana

ویب ڈیسک ۔۔ بھارتی ریاست ہریانہ کے وزیراعلی ایم ایل کھٹرنےمسلمانوں کوکھلی جگہوں پرنمازکی ادائیگی سےروک۔ اپنےحکمنامےمیں ایم ایل کھڑنےدھمکی دی ہے کہ کھلی جگہوں پرنمازاداکرنےکی ہرگزاجازت نہیں دی جائےگی۔

وزیراعلی ہریانہ نے ہندوانتہاپسندوں کوخوش کرنےکیلئےکہاہے کہ کھلی جگہوں پرنماز ادا نہیں کرنے دی جائے گی۔اس سےپہلےمسلمانوں کوجن کھلے مقامات پرنماز جمعہ ادا کرنے کی اجازت دی گئی تھی اب اسےبھی منسوخ کردیاگیاہے۔

بھارتی میڈیاکےمطابق ہندوانتہاپسندوں نےہریانہ کےشہرگڑگاؤں میں مسلسل تیسرے جمعہ کو بھی مسلمانوں کونمازجمعہ ادا نہیں کرنےدی۔ مسلمانوں کی نمازکی جگہ پررکاوٹیں کھڑی کردی گئیں۔ گزشتہ جمعہ ہندوانتہاپسندوں نے نماز کی جگہ پرگوبرپھینک دیاتھا۔

مسلمانوں کو جن کھلے میدانوں یا جگہوں پرنماز ادا کرنے کی سرکاری طورپراجازت دی گئی تھی وہ تمام اجازت نامے بھی منسوخ کردئیے گئے ہیں۔

اس حکمنامےکےبعدہریانہ کےمسلمانوں میں سخت غم وغصہ پایاجاتاہے۔ بھارت میں انسانی حقوق کی تنظیموں نےہریانہ حکومت کےاس فیصلےکی سخت مذمت کی ہے۔

یہ بھی چیک کریں

twitter miltdown

ٹویٹرمیں خوف وہراس کاماحول

ویب ڈیسک ۔۔ مفتوحہ علاقےمیں داخل ہونےوالےکسی فاتح کی طرح ایلون مسک کےٹویٹرکےسربراہ کاعہدہ سنبھالتےہی …