Home / نیاآرمی چیف اورپنجاب کااگلاوزیراعلیٰ کون؟2بڑی خبریں

نیاآرمی چیف اورپنجاب کااگلاوزیراعلیٰ کون؟2بڑی خبریں

Pakistan's next army chief

کون ہوگانیاآرمی چیف ۔۔ ؟؟

لاہور(خصوصی رپورٹ) یہ سوال ان دنوں ہرپاکستان کے ذہن میں کلبلارہاہے ۔ جتنےمنہ اتنی باتیں،تاہم اس حوالےسےایک انتہائی اہم اوردلچسپ خبرآج ہم اپنےقارئین سےشئیرکرنےجارہےہیں ۔ یہاں آپ کویہ بھی بتاتےچلیں کہ یہ وہی خبرہےکہ جس کوسننےکےبعدعمران خان فیصل آباداورپشاورکےجلسوں میں اپنےحواس کھوبیٹھےاورآرمی چیف کی تعیناتی کےحوالےسےانتہائی متنازع اورغیرضروری باتیں کیں۔

ذمہ دارذرائع کےمطابق نئےآرمی چیف کی تعیناتی کیلئےوزیراعظم شہبازشریف کی حکومت لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیرکی تعیناتی پربھی سنجیدگی سےغورکررہی ہے۔ قارئین کی معلومات میں اضافےکیلئےبتاتےچلیں کہ یہ وہی عاصم منیرہیں جنہیں عمران خان نےاپنی حکومت کےابتدائی دورمیں آئی ایس آئی چیف کےعہدےسےتبدیل کروادیاتھاکیونکہ لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیراس وقت کی عمران خان حکومت کووزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدارکی مبینہ کرپشن بارےرپورٹس پیش کررہےتھے۔ جس کےبعدوزیراعظم عمران خان نےناراض ہوکرعاصم منیرکاآرمی چیف سےکہہ کرتبادلہ کروادیاتھا۔

ذرائع کاکہناہےکہ عمران خان کےعلم میں جب یہ بات آئی کہ موجودہ حکومت نئےآرمی چیف کیلئےلیفٹیننٹ جنرل عاصم منیرکےنام پربھی سنجیدگی سےغورکررہی ہےتووہ غصےسےآگ بگولہ ہونےلگےاوریہی وجہ تھی کہ انہوں نےپہلےفیصل آباداوراس کےبعدپشاورکےجلسےمیں سپہ سالارکی تعیناتی کےحوالےسےانتہائی متنازعہ باتیں کیں ۔

یہاں یہ بھی ہمارےپڑھنےوالوں کوپتاہوناچاہیےکہ لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیرموجودہ آرمی چیف جنرل قمرجاویدباجوہ کی 29نومبر2022کوریٹائرمنٹ سےپہلےریٹائرہونےجارہےہیں لیکن اگرحکومت انہیں اگلاآرمی چیف لگاناچاہتی ہےتوقانون کےمطابق یاتوانہیں چندروزکی توسیع دیناہوگی یاپھرموجودہ آرمی چیف کواپنی مقررہ تاریخ سےپہلےریٹائرہوجاناہوگا۔

آرمی چیف بننےکی دوڑمیں لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیرکےعلاوہ سندھ رجمنٹ سےتعلق رکھنےوالےلیفٹیننٹ جنرل ساحرشمشادمرزا، بلوچ رجمنٹ سے تعلق رکھنے والےلیفٹیننٹ جنرل اظہر عباس، لیفٹیننٹ جنرل نعمان محمود، آرٹلری کےلیفٹننٹ جنرل محمد عامر،اورفرنٹئیرفورس رجمنٹ سےتعلق رکھنےوالےلیفٹیننٹ جنرل چراغ حیدربھی شامل ہیں۔

نئےآرمی چیف کی تعیناتی کےحوالےسےایک انٹرویومیں وزیردفاع خواجہ آصف نےکہاکسی کےدباومیں آکرکوئی فیصلہ نہیں کریں گے،تعیناتی کےحوالےسےعمران خان کےمتنازع بیان پرکوئی رعایت نہیں برتی جائےگی۔

پنجاب حکومت کی تبدیلی کیلئےکوششیں تیز

باخبرذرائع کےمطابق چودھری شجاعت حسین اورآصف زرداری پنجاب میں حکومت کی تبدیلی کیلئےایک بارپھرسرگرم ہوچکےہیں اوراس حوالےسےخبریہ ہےکہ ق لیگ کےپنجاب اسمبلی میں موجود10ارکان میں سے7چودھری شجاعت سےمل کرانہیں اپنی حمایت کایقین دلاچکےہیں۔

ویسےپنجاب میں حکومت کی تبدیلی کاایک طریقہ تویہ ہےکہ گورنروزیراعلیٰ پرویزالہیٰ سےاعتمادکاووٹ لینےکیلئےکہیں اورووٹنگ میں ق لیگ کےارکان انہیں ووٹ نہ دیں ، دوسراطریقہ یہ بھی ہےکہ خودوزیراعلیٰ پرویزالہیٰ تحریک انصاف چھوڑکرالگ ہوجائیں اورپنجاب میں ن لیگ سےمل جائیں ۔

اس کےعلاوہ پنجاب اسمبلی کےاندرتحریک انصاف کےلوگوں کوتوڑنےکی کوشش بھی ساتھ ساتھ جاری ہے۔ اگرایساہوجاتاہےتوتحریک عدم اعتمادپرووٹنگ والےدن یہ لوگ اسمبلی میں حاضرنہیں ہونگےاوریوں پرویزالہیٰ مطلوبہ اکثریت کھوبیٹھیں گے۔

اب ان میں سےکون ساطریقہ آزمایاجاتاہے،یہ توابھی نہیں کہاجاسکتالیکن اتنی بات پکی ہےکہ پنجاب میں حکومت کی تبدیلی کیلئےکام جاری ہے۔

یہ بھی چیک کریں

Maryam Aurengzeb harassment

مریم اورنگزیب کی ہراسانی،پی ٹی آئی سپورٹرزکی مذمت

ویب ڈیسک ۔۔ لندن میں وفاقی وزیراطلاعات مریم اورنگزیب کےساتھ تحریک انصاف کےچندکارکنوں کی بدتمیزی …