این اے249 کراچی کی سیٹ پیپلزپارٹی لےاڑی

Qadir Mandokhel PPP

ویب ڈیسک ۔۔ ایک انتہائی کڑےاوراعصاب شکن مقابلےکےبعدکراچی کےحلقہ این سےدوسوانچاس کامعرکہ بہت ہی مختصرمارجن کےساتھ پیپلزپارٹی کےامیدوارقادرمندوخیل کےنام رہا۔

مسلم لیگ ن کےامیدوارقادرمندوخیل دوسرےنمبرپررہے۔اس ضمنی الیکشن کی خاص بات یہ تھی کہ اس میں ن لیگ،تحریک انصاف ، پیپلزپارٹی اورپاک سرزمین پارٹی بڑھ چڑھ کرحصہ لےرہی تھیں۔ سیاسی جماعتوں کےجوش و خروش کےباوجوداس حلقےمیں ووٹرٹرن آوٹ انتہائی کم رہا۔

غیرحتمی غیرسرکاری نتائج کےمطابق جیتنےوالےامیدوارقادرمندوخیل نے16156جبکہ ن لیگ کےمفتاح اسماعیل نے15473ووٹ لئےاوردوسرےنمبرپررہے۔

کالعدم ٹی ایل پی کے نذیر احمد 11125ووٹ لےکر تیسرے، پی ایس پی کے مصطفیٰ کمال 9227 ووٹ لےکر چوتھے، تحریک انصاف کے امجد آفریدی 8922 ووٹ لے کر پانچویں اورایم کیوایم پاکستان کےمحمدمرسلین 7511 ووٹ لے کر چھٹے نمبر پر ہیں۔

یاد رہے کہ 2018 میں شہبازشریف معمولی فرق سے فیصل واوڈا سے ہار گئے تھے، اس انتخاب میں ن لیگ 723 ووٹوں سے ہاری تھی۔ جبکہ اس بار (ن) لیگ کے امیدوار مفتاح اسماعیل 683 ووٹوں سے ہارگئے۔

یہ بھی چیک کریں

Election Commission Pakistan

الیکٹرانک ووٹنگ مشین پرایک اورعدم اعتماد

ویب ڈیسک ۔۔ مسلم لیگ ن کےبعدالیکشن کمیشن نےبھی الیکٹرانک ووٹنگ مشین کےاستعمال پراپنےتحفظات سےحکومت …