کورونا وائرس
پاکستان میں
مصدقہ کیسز
(+49 ) 1,529,834
اموات
() 30,379
صحتیاب مریض
1,494,141
فعال کیسز
5,314
Last updated: مئی 23, 2022 - 6:12 شام (+05:00) دوسرے ممالک
Home / !خبردار – یہ نوسربازفیملی آپ کولوٹ سکتی ہے

!خبردار – یہ نوسربازفیملی آپ کولوٹ سکتی ہے

Fraud file photo

آپ نےاکثراخباروں میں پڑھاہوگاکہ نوسربازوں نےبس میں سوارمسافروں کونشہ آورمٹھائی کھلاکرنقدی اورقیمتی سامان سےمحروم کردیا۔ آپ سوچیں گےکہ کیسےکوئی شخص کسی اجنبی سےنشہ آورمٹھائی کھاکراپنی قیمتی جمع پونجی سےمحروم ہوناچاہےگا۔ سوال آپ کابالکل جائزہےاورمیرےپاس اس کاجواب بھی ہے۔ دوستویہ جونوسربازطبقہ ہےناں ، یہ میری اورآپ کی سوچ سےآگےکی چال سوچتاہےاوریہی وجہ ہےکہ وہ اپنےمنصوبےمیں باآسانی کامیاب ہوجاتےہیں اورہمیں جب تک ان کےطریقہ واردات کی سمجھ آتی ہےتب تک وہ کوئی اگلامنصوبہ بناچکےہوتےہیں۔

سوچیں آپ کسی پرانی بس میں سفرکررہےہوں اورراستےمیں کوئی اچھی خاصی معززاورشریف دکھائی دینےوالی فیملی بس میں سوارہواورآپ کےساتھ آکربیٹھ جائے۔ راستےمیں باتیں شروع ہونگی اوربات سفرکےساتھ ساتھ آگےبڑھتی جائےگی۔ کچھ دورجاکراس خاندان کاسربراہ جوآپ کےساتھ بیٹھاہےآپ کوبخوشی بتائےگاکہ وہ بیٹی کارشتہ طےکرکےآرہاہےاوراللہ کےکرم سےاگلےماہ بیٹی کورخصت کردےگا۔ ظاہرہےیہ خبرسن کرآپ اسےمبارکباد دینگےاورپھروہ شخص اپنےسامان میں سےمٹھائی نکال کرکہےگاکہ منہ میٹھاکریں اورظاہرہےآپ نہ نہیں کریں گے،دیکھتےہی دیکھتےوہ شخص بس میں بیٹھےدیگرلوگوں کوبھی وہ مٹھائی کھلائےگااوران سےبیٹی کیلئےدعاوں کی درخواست کرےگا۔

مٹھائی کھاتےہی سب لوگ نیندکی وادی میں اترجائیں گےاوروہ نوسربازفیملی آپ سب کی نیک کمائی اپنی بیٹی کےجہیزکیلئےسمیٹ کرآرام سےاگلےسٹاپ پراترجائےگی اورکچھ دیربعدجب آپ کوہوش آئےگاتوسب کچھ لٹ چکاہوگا۔

ویسےنوسربازی کایہ طریقہ آج کل پراناہوچکاہے۔ لیکن نوسربازجیساکہ میں نےکہاکہ ہم سےدوہاتھ آگےکی سوچتےہیں،انہوں نےسادہ لوح عوام کولوٹنےکےایسےایسےطریقےنکالےہوئےہیں کہ میری اورآپ کی عقل دنگ رہ جائےگی ۔ نوسربازی کی ایسی ہی ایک واردات میں اللہ کےکرم سےمیری نیک کمائی لٹنےسےبچ گئی۔ یہ واردات اس قدرانوکھی اوراچانک تھی کہ کوئی بھی علقمندسےعقلمندانسان بیوقوف بن جائےاوراپنےہاتھوں سےاپنےپیسےنوسربازوں کےحوالےکردے۔ آئیےاس واردات کاآنکھوں دیکھاحال میں آپ کوسناتاہوں تاکہ لوگ محتاط رہیں اورجہاں تک ممکن ہوان نوسربازوں سےنہ صرف محفوظ رہیں بلکہ اگرانہیں یہ لوگ کہیں ملیں توفوراً پولیس کومطلع کریں۔

دوستوآج سےچندسال پہلےمیں لاہورکےعلاقےگلبرگ میں حسین چوک سےپیدل اپنےگھرکی جانب جارہاتھاکہ اچانک ایک بڑی سی گاڑی میرےپاس آکررکی ۔ مجھےلگایہ لوگ راستہ پوچھنےکیلئےرکےہیں لیکن ایسانہیں تھا۔ میں گاڑی کی طرف متوجہ ہواتوڈرائیورکےساتھ بیٹھاہواایک بہت ہی معززدکھنےوالاشخص مجھ سےٹوٹی پھوٹی اردومیں مخاطب ہوکربولاکہ اسےکسی قریبی منی چینجرکی تلاش ہے۔ میں نےاسےگائیڈکردیاتووہ شخص بولاکہ وہ بیرون ملک سےآیاہےاورپاکستان کی کرنسی کی اسےپہچان نہیں ۔ اس نےمجھ سےکہاکہ اگرمیرےپاس پاکستانی کرنسی موجودہےتووہ اسےدیکھناچاہےگاتاکہ منی چینجراس کےساتھ دھوکانہ کردے۔ یہ بات سن کرمجھےتھوڑاعجیب سامحسوس ہوااورمیں نےگاڑی کی پچھلی سیٹ پرنظردوڑائی تووہاں ایک بہت گریس فل خاتون ایک چھوٹےبچےکوگودمیں لیکربڑی معصومیت سےمیری طرف دیکھ رہی تھی ۔

خیرمیں نےانہیں پاکستانی کرنسی دکھانےکیلئےجیب میں ہاتھ ماراتوسوائےدس دس کےنوٹوں کےکچھ ہاتھ نہ آیا۔ میں نےانہیں دس روپےدکھانےکی کوشش کی اس شخص نےبراسامنہ بناکرکہاکہ نہیں کوئی بڑانوٹ دکھاو۔ جب اس نےیہ بات کی تومیراشک کچھ کچھ یقین میں بدلنےلگاکہ یہ ضرورکوئی نوسربازہیں جواس طریقےسےلوگوں کولوٹ رہےہیں۔ اس دوران میں نےڈرائیورسےبات کرنےکی کوشش کی تواس نےمیری بات کاکوئی جواب نہ دیا۔ اس وقت میری جیب میں کوئی بڑانوٹ نہیں تھا،اس لئےوہ فیملی مایوس ہوکرآگےبڑھ گئی ۔

ان کےاس طرح جانےکےبعدمجھےمکمل یقین ہوگیاکہ یہ نوسربازگروہ تھاجوبیرون ملک سےآنےکابہانہ کرکےیوں راہ چلتےلوگوں سےپاکستانی کرنسی دیکھنےکےبہانےان سےپیسےلیتاہےلیکن جب وہ پیسےانہیں واپس کرتاہےتووہ پورےپیسےنہیں ہوتےکیونکہ بڑی صفائی سےوہ ان پیسوں میں سےایک آدھ نوٹ چھپالیتاہے۔ ہمیں اس واردات کاپتااس وقت چلتاہےجب بہت دیرہوچکی ہوتی ہےاورکئی مرتبہ توپیسےکم ہونےکاپتاچلنےپربھی ہمارایقین اس فیملی کی طرف نہیں جاتابلکہ ہم سجھتےہیں کہ شایدکہیں خرچ ہوگئےیاگرگئےہونگے۔

میرےایک اورجاننےوالےکےساتھ بھی یہی واقعہ ہوالیکن وہ بےچارہ اس واردات میں لٹ گیاکیونکہ اس کےپاس کافی نوٹ تھےاوروہ بھی بڑے۔

تودوستودیکھاآپ نےیہ نوسربازکیسےفنکارلوگ ہوتےہیں اورکیسےکیسےعقلمندلوگوں کوآسانی سےالوبناکرچلےجاتےہیں۔ آپ کویہ واقعہ بتانےکامقصدآپ کوہوشیارکرناہےکہ راہ چلتے،سفرکرتےیاگھرپربھی ہوں توبہت ہوشیاررہیں،ہمیشہ اپنےدماغ کوکھلارکھیں اوراگرآپ کوکچھ بھی غیرمعمولی لگےتوضرورکسی اپنےسےبات شئیرکیں ،خودسےکوئی فیصلہ نہ کریں۔ اللہ تعالیٰ ہم سب کواپنی حفظ و امان میں رکھے،آمین۔

(اسی سلسلےکوآگےبڑھاتےہوئےمزیدسچےواقعات بیان کروں گا)

About Zaheer Ahmad

Muhammad Zaheer Ahmad is a senior journalist with a career spanning over 20 years in print and electronic media. He started from the Urdu language Daily Din, proceeding to Daily Times, where he stayed as sub-editor for 2 years. In 2008, he joined broadcast journalism as a Producer at the English language Express 24/7, and later to its major subsidiary, Express-News. Zaheer currently works there as a Senior News Producer. He is also the Managing Editor of newsmakers.com.pk. Zaheer can be reached at [email protected]

یہ بھی چیک کریں

Challenges before Shahbaz Sharif Gvovt

کیاشہبازشریف ان چیلنجوں پرقابوپالیں گے؟

وزیراعظم شہبازشریف اوران کی نئی نویلی حکومت کےسامنےدودھاری تلوارہے۔ انہیں جہاں اپنی کارکردگی بہتردکھانی ہےوہیں …