ویکسینیشن سےپہلےاس آرٹیکل کوضرورپڑھیں

corona vaccination

لاہورمیں رہاش رکھنےوالےوہ لوگ جواپنےساٹھ یاساٹھ سال کی عمرسےزائدبزرگوں خی کووڈویکسینیشن کروانےکےخواشمند ہیں ان کیلئےیہ آرٹیکل پڑھنابہت ضروری ہے۔

نمبرون : سب سےپہلی بات یادرکھنےکی یہ ہےکہ رمضان المبارک میں ویکسینیشن دوشفٹوں میں کی جارہی ہے۔ پہلی شفٹ صبح دس بجےسےشام چاربجےتک اوردوسری شفٹ رات نو بجےسےایک بجےرات تک ۔

نمبردو: اس بات کادھیان رکھیں کہ اگرآپ کےپاس اپنی سواری نہیں توپورےوقت پرویکسینیشن سینٹرپہنچیں کیوںکہ گیٹ وقت سےپہلےنہیں کھلےگااوراگرآپ کےپاس سواری نہیں تویادرکھیں کہ گیٹ کےباہربزرگوں کوبٹھانےکاکوئی انتظام نہیں ۔

نمبرتھری: لاہورمیں ویکسینیشن سینٹردوجگہ پربنائےگئےہیں ، ایک ایکسپوسینٹرجوہرٹاون اوردوسرامینارپاکستان پر۔

نمبرچار: ویکسینیشن سینٹرجانےسےپہلےیہ بھی دیکھ لیں کہ آپ کےبزرگ ٹھیک طرح سےچل پاتےہیں یانہیں ۔ اگرتووہ ٹھیک طرح سےچلتےہیں توپھرکوئی مسئلہ نہیں لیکن اگرانہیں چلنےمیں مسئلہ ہےاوروہ بہت ضعیف ہیں توپھرانکےلئےوہیل چئیرمسٹ ہے۔

نمبرپانچ: وہیل چیئرویکسینیشن سینٹرسےملتی ہیں لیکن وہ اتنی قلیل تعدادمیں ہیں کہ جس کےہاتھ لگ گئی سمجھووہ قسمت کادھنی ہے۔ اس لئےمیرامشورہ ہےکہ اگرآپ کےبزرگ ٹھیک سےچل نہیں پاتےتوانکےلئےگھرسےوہیل چیئرلیکرجائیں ۔

نمبرچھ : اگرآپ کےپاس اپنی وہیل چیئرنہیں اورآپکےبزرگ بھی چل نہیں سکتےتوپھرلازم ہےکہ آپ ویکسینیشن سینٹرپرکسی ایسےرضاکارکوپکڑیں جووہیل چیئرپرکےکام پرمامورہو۔ ہاں بس اس کی جیب گرم کرناہوگی ۔ اس کےبات اگرآپ کووہیل چیئرمل گئی توسمجھیں کہ آپ کاکام ڈبل سپیڈسےہوگا۔ کیونکہ وہیل چیئروالوں کومعذورسمجھ کرسب سےپہلےجگہ دی جاتی ہے۔

نمبر: یہ سب کام مکمل کرنےکےبعدآپ جیسےہی مین اینٹرنس سےہال میں داخل ہونگےتوپھرحکومت نےاچھےانتظامات کئےہیں ، آپ کوزیادہ زحمت نہیں اٹھاناپڑےگی۔

ابوت ظہیر احمد

The writer is a working journalist for the last 20 years. Currently, he is working for a news channel. He can be reached at zaheer.ahmad.lhr@gmail.com. His twitter handle is: @ZaheerAhmad17

یہ بھی چیک کریں

فیصل واوڈاکوآخری موقع مل گیا

ویب ڈیسک ۔۔ کوئی کتنا بڑا کیوں نہ ہو، میرٹ پر فیصلہ کریں گے۔ فیصل …