News Makers

تازہ ترین

کورونا وائرس پاکستان میں مصدقہ کیسز
374173
  • اموات 7662
  • سندھ 162227
  • پنجاب 114010
  • بلوچستان 16744
  • خیبرپختونخوا 44097
  • اسلام آباد 26569
  • گلگت بلتستان 4526
  • آزاد کشمیر 6000

 

کابینہ میں نئے’’مہمانوں‘‘ کی آمد متوقع،افسرشاہی اوروزراکےطوطےاڑگئے

کابینہ میں نئے’’مہمانوں‘‘ کی آمد متوقع،افسرشاہی اوروزراکےطوطےاڑگئے
اپ لوڈ :- جمعہ 13 جنوری 2019 اپ ڈیٹ :- جمعہ 02 جنوری 2009
ٹوٹل ریڈز :- 306

ویب ڈیسک ۔۔ 
 
معروف انگریزی اخبارمیں شائع ہونےوالی ایک اہم مگردلچسپ خبرکےمطابق تحریک انصاف کی موجودہ حکومت نےوفاقی کابینہ کی کارکردگی بڑھانےکانیامنصوبہ تیارکیاہے۔ منصوبہ کام کرےگایانہیں ؟ یہ توبعدکی بات ہےلیکن فی الحال آپ کوبتاتےہیں کہ یہ منصوبہ ہےکیا؟
 
 وفاقی وزارتوں کی کارکردگی میں اضافےکیلئےحکومت نےہروفاقی وزیرکےساتھ اس کےمتعلقہ شعبےکاایک ماہرلگانےکافیصلہ کیاہے۔ یہ بالکل اسی طرح کا ایک منصوبہ ہےجس طرح امریکامیں صدراپنی مرضی کےچنےہوئےغیرمنتخب لیکن اپنےاپنےشعبےکےماہرافرادکومختلف وزارتوں میں انڈرسیکرٹری کےعہدےپرتعینات کرتاہے۔
 
 سرکاری طورپران افرادکوٹیکنیکل ایڈوائزرزکہاجائےگا ۔ یہ ٹیکنیکل ایڈوائزرزوفاقی سیکرٹریزکےاوپرجبکہ وفاقی وزراکےنیچےکام کریں گے۔ انہیں سپیشل پےاسکیل کےتحت گریڈ23دیاجائےگاکیونکہ وفاقی سیکرٹری کاگریڈ22ہوتاہے۔ 
 
 یہ طریقہ کارامریکی نظام کی ایک نقل لگتاہےجس میں صدرمملکت ہروزارت میں اس کےماہرکوانڈرسیکرٹری کےعہدےپرتعینات کرتاہےتاکہ وہ حکومتی کاموں کوپایہ تکمیل تک پہنچانےاوراہداف کےحصول کیلئےانتظامیہ کی مدد کرسکیں ۔ 
 
 
 
ایک حکومتی اہلکارکےمطابق وفاقی کابینہ میں ان ٹیکنیکل ایڈوائزرزکولگانےضرورت اس لئےپیش آئی کیونکہ حکومت کےخیال میں موجودہ بیوروکریسی حکومتی منصوبوں اوراہداف کی تکمیل میں بہت بڑی رکاوٹ ہے۔
 
 سناہےبیوروکریسی نےاس مجوزہ نظام کوٹیبل پرآنےسےپہلےہی مستردکردیاہے۔ سینئربیوروکریٹس کاکہناہےکہ پاکستان کےموجودہ نظام اوررولزآف بزنس کےتحت وفاقی وزارتوں میں ’’ ٹیکنیکل ایڈوائزرز‘‘کی تعیناتیوں کی کوئی گنجائش نہیں ۔ لیکن اس خبرکوپڑھنےکےبعدایک بات توثابت ہوجاتی ہےکہ وزیراعظم عمران خان اپنےوزراکی کارکردگی سےغیرمطمئین ہیں اورگزشتہ دنوں کابینہ میں اکھاڑپچھاڑکی جوباتیں ہورہی تھیں موجودہ منصوبہ بھی شایداسی کاایک حصہ ہے۔ 
 
۔۔۔۔۔۔۔۔۔
 
Aik khabar ke mutabiq wifaqi wuzra ki kar-kar-gi barhanay ke lia PTI hakumat ney har wifaqi wazir ke sath aik technical adviser laganay ka faisla kia hay. Hakumat ka ye mansooba American administration say milta julta hay jis mein Sadar apni choice ke no elected logon ko wazarton mein under secretary ke uhday per lagata hey. Hakumat nay ye faisla is lia kia he ku keh wuzra ki kar-kar-dagi twaquat ke mutabi nahi. Ye technical advisers hakumat ke mansobon ki takmeel mein bureaucracy ki madad krain gay. In technical advisers to grade 23 dia jaya ga. Ye technical advisers Wifaqi wazir ke neechay aor wifaqi secretary ke upar kam krain gay. Itla-aat ke mutabiq bureaucracy ne is mansobay ki mukhalifat ka faisla kia hay. Sarkari afsran ke mutabiq is qisam ke technical advisers ki wifaqi wazarton mein tayinati ki koi gunjaish nahi.

Copyright © 2018 News Makers. All rights reserved.