News Makers

تازہ ترین

کورونا وائرس پاکستان میں مصدقہ کیسز
374173
  • اموات 7662
  • سندھ 162227
  • پنجاب 114010
  • بلوچستان 16744
  • خیبرپختونخوا 44097
  • اسلام آباد 26569
  • گلگت بلتستان 4526
  • آزاد کشمیر 6000

 

ٹرمپ کاانکار ۔۔ امریکاغیریقینی صورتحال کےدہانےپر

ٹرمپ کاانکار ۔۔ امریکاغیریقینی صورتحال کےدہانےپر
اپ لوڈ :- جمعرات 12 نومبر 2020
ٹوٹل ریڈز :- 99

امریکی صدرٹرمپ الیکشن میں اپنی ہارکےباوجوددوسری مدت کیلئےامریکاکاصدربننےکیلئےپرامیدہیں ۔ صدارتی انتخابات میں ڈیموکریٹک امیدوارجوبائیڈن کی ناقابل شکست برتری کےباوجودٹرمپ اپنی جیت کیلئےپرامیدہیں ۔ واضح رہےکہ ٹرمپ نےتاحال شکست تسلیم نہیں کی اوراسی لئےانہوں نےنتائج کوعدالت میں چیلنج کرنےکافیصلہ کیاہے۔ ایک ٹویٹ میں انہوں نےدعویٰ کیاکہ وہ بہت تیزی سےآگےبڑھ رہےہیں ۔

ادھرنومنتخب امریکی صدرجوبائیڈن نےٹرمپ کےشکست تسلیم نہ کرنےکوشرمناک عمل قراردیتےہوئےاقتدارکی ہموارمنتقلی سےانکارکےبیان کومستردکردیاہے۔ بائیڈن کاکہناہےکہ اقتدارکی منتقلی کوکوئی نہیں روک سکتا۔ ٹرمپ بطورصدرجوروایت چھوڑرہےہیں وہ اچھی نہیں ۔ انہوں نےکہاکہ ٹرمپ کےتعاون کےبغیراقتدارکی منتقلی میں کوئی رکاوٹ نہیں ۔

اس تمام صورتحال پرتبصرہ کرتےہوئےامریکامیں مقیم معروف صحافی عظیم ایم میاں کاکہناہےکہ صدرٹرمپ کےنتائج تسلیم کرنےسےانکارکےعمل نےامریکی جمہوریت کیلئےبعض چیلنجزپیداکرنےکےعلاوہ امریکی سفارتکاروں اورفوجی قیادت کیلئےبھی مسائل پیداکردئیےہیں ۔ صدرٹرمپ کی جانب سےاقتدارکی ہموارمنتقلی سےانکارکےبعدممکنہ طورپرامریکامیں ایک بڑےسیاسی وآئینی بحران کاخدشہ پیداہوگیاہے۔ صدرٹرمپ کی جانب سےالیکشن میں مبینہ دھاندلی کوسپریم کورٹ میں چیلنج کئےجانےکےبعدفیصلہ حیران کن بھی ہوسکتاہےکیونکہ ملک کی اعلیٰ ترین عدالت میں ریپبلکن ججوں کی تعدادڈیموکریٹک ججوں سےزیادہ ہے۔

دوسری جانب امریکی سینیٹ میں ریپبلکن پارٹی نےپچاس نشستیں حاصل کرکےاکثریت حاصل کرلی ہےجبکہ ڈیموکریٹک پارٹی کےپاس صرف اڑتالیس سینیٹرزہیں ۔ سینیٹ میں قائدایوان ریپبلکن پارٹی کےسینیٹرمچ میککانل بھی بائیڈن کی بجائےٹرمپ کی حمایت کررہےہیں ۔

سیاسی تجزیہ نگاروں کےخیال میں صدرٹرمپ کےپاس انتخابی ہارکےباوجودکچھ ایسےآپشن ہیں کہ جنہیں استعمال کرکےانتقال اقتدارکی ہموارمنتقلی کی راہ میں روڑےاٹکائےجاسکتےہیں ۔ جن میں سےایک آپشن توبعض ریاستوں میں ووٹوں کی دوبارہ گنتی ہے۔ دوسرےانتخابات کی نگرانی کرنےوالےحکام اورنتائج کی تصدیق کرنےوالےریاستی سیکرٹری آف سٹیٹ  سےنتائج کی تصدیق کورکوادیاجائےجوکہ آٹھ دسمبرتک لازمی ہے۔ اسی طرح ریپبلکن ریاستوں کےگورنرالیکٹورل کالج کےکل پانچ سواڑتیس ووٹروں کی تقرری میں مختلف حیلوں بہانوں سےرکاوٹیں کھڑی کرسکتےہیں حالانہ روایتی طورپرتویہی ہوتاہےکہ الیکٹورل کالج کےجتنےووٹ ٹرمپ کوملےہیں وہ انہیں پڑیں گےاورجتنےجوبائیڈن کےہیں وہ انہی کےکھاتےمیں جائیں گے۔

سینئرصحافی عظیم ایم میاں کےبقول اگرچہ ان رکاوٹوں کےباوجودٹرمپ کی کامیابی کےامکانات کم ہیں تاہم جنوری دوہزاراکیس سےقبل امریکامیں ایک غیریقینی صورتحال پیداہونےجارہی ہے۔۔

 

ٹیگز

Muhammad Zaheer

The author is a journalist. He is currently working for a news channel.

Muhammad Zaheer مزید تحریریں

Muhammad Zaheer

Copyright © 2018 News Makers. All rights reserved.