News Makers

تازہ ترین

کورونا وائرس پاکستان میں مصدقہ کیسز
64028
  • اموات 1317
  • سندھ 25309
  • پنجاب 22964
  • بلوچستان 3928
  • خیبرپختونخوا 8842
  • اسلام آباد 2100
  • گلگت بلتستان 658
  • آزاد کشمیر 227

 

مسلم لیگ ن کیلئےایک بری اوردواچھی خبریں

مسلم لیگ ن کیلئےایک بری اوردواچھی خبریں
اپ لوڈ :- منگل 25 فروری 2020
ٹوٹل ریڈز :- 128

ویب ڈیسک ۔۔
 
آج بروز منگل 25فروری 2020مسلم لیگ ن کیلئےایک بری اوردواچھی خبریں آئی ہیں ۔ 
 
 بری خبرتویہ ہےکہ پنجاب حکومت نےسابق وزیراعظم نوازشریف کی ضمانت میں توسیع نہ کرنےکافیصلہ کیاہےاوراپنےفیصلےسےوفاق کوآگاہ کرکےاس مسئلےپرفائنل فیصلےکااختیاروفاقی کابینہ کودےدیاہے ۔ 
 
 نوازشریف کی ضمانت میں توسیع نہ کرنےکافیصلہ وزیراعلیٰ عثمان بزدارکی زیرصدارت ہونےوالےصوبائی کابینہ کےاجلاس میں ہوا۔ اجلاس کےبعدمیڈیاکوبریفنگ دیتےہوئےوزیرقانون راجہ بشارت کاکہناتھاکہ شریف خاندان نےنوازشریف کےعلاج معالجےسےمتعلق اطمینان بخش دستاویزات فراہم نہیں کیں ۔ سولہ ہفتےبعدبھی نوازشریف کسی ہسپتال میں داخل نہیں ہوئے۔ ضمانت نہ دینےکےفیصلےسےمتعلق وفاق کوآگاہ کررہےہیں اوراس معاملےپرحتمی فیصلےکااختیاراب وفاقی کابینہ کوہوگا ۔ 
 
یہ بھی پڑھیں ۔۔
 
 نوازشریف کوضمانت نہ دینےکےفیصلےپرردوعمل دیتےہوئےشہبازشریف نےاسےپنجاب حکومت کی کم ظرفی اورسیاسی انتقام کےمترادف قراردیا ۔ کہاکہ حکومت کی کم ظرفی کودیکھتےہوئےہی مسلم لیگ ن نےعدالت کادروازہ کھٹکھٹایاتھا۔ ادھررہنما ن لیگ راناثنااللہ نےکہاکہ نوازشریف کی ضمانت میں توسیع کی کوئی درخواست پنجاب حکومت کےپاس نہیں تھی ۔ 
 
یہ بھی پڑھیں ۔۔
 
 اب آئیےاچھی خبروں کی طرف ۔ پہلی اچھی یہ ہےکہ اسلام آبادہائیکورٹ نےنارووال اسپورٹس سٹی کیس میں احسن اقبال کی ضمانت منظورکرتےہوئےانہیں رہاکرنےکاحکم دیاہے ۔ اس خبرکےتھوڑی ہی دیربعداسلام آبادہائیکورٹ ہی کےدورکنی بنچ نےسابق وزیراعظم شاہدخاقان عباسی کی ایل این جی کیس میں ضمانت منظورکرلی ۔ اس کیس میں چیف جسٹس اطہرمن اللہ نےنیب پراسیکیوٹرپرسخت برہمی کااظہارکرتےہوئےاپنےریمارکس میں کہاکہ جب اس کیس میں پبلک منی کااستعمال ہی نہیں ہواتوکیس کیابنتاہے؟ نیب پراسیکیوٹرنےکہاکہ ایل این جی ٹھیکہ زیادہ پیسوں پردیاگیاجس پرچیف جسٹس نےکہاکہ جس کمپنی نےسب سےکم پیسوں پریہ ٹھیکہ لیناتھاکیااس نےٹینڈرنگ میں حصہ لیا؟ اس سوال پرنیب پراسیکیوٹرنےکہاکہ نہیں ۔ اس جواب پرعدالت نےسخت برہمی کااظہارکیااورکہا جس کمپنی نےٹھیکہ لینےکیلئےکوئی بولی ہی نہیں دی اس کےاعتراض کی کوئی حیثیت نہیں ۔ 
 
یہ بھی پڑھیں ۔۔

Copyright © 2018 News Makers. All rights reserved.