News Makers

تازہ ترین

جہانگیرترین کوحکومتی مذاکراتی کمیٹی سےعمران خان نےہٹایا ۔۔ وجہ سامنےآگئی

جہانگیرترین کوحکومتی مذاکراتی کمیٹی سےعمران خان نےہٹایا ۔۔ وجہ سامنےآگئی
اپ لوڈ :- بدھ 03 فروری 2020 اپ ڈیٹ :- بدھ 05 فروری 2020
ٹوٹل ریڈز :- 123

ویب ڈیسک ۔۔
 
تحریک انصاف کی حکومت ان دنوں اتحادیوں کی ناراضگی کی وجہ سےسخت پریشان ہے۔ مرکزاورپنجاب میں حکومت کی اہم اتحادی جماعت مسلم لیگ ق نےوزیراعظم عمران خان کی جانب سےبنائی جانےوالی نئی مذاکراتی کمیٹی کومستردکرتےہوئےپرجہانگیرترین کی سربراہی میں بنائی گئی پہلی کمیٹی کی فی الفوربحالی کامطالبہ کیاہے۔ مرکزمیں ایک اوراتحادی بی این پی مینگل بھی پہلی مذاکراتی کمیٹی تحلیل کئےجانےپرخوش نہیں اورانہوں نےنئی مذاکراتی کمیٹی سےبات چیت کرنےسےانکارکردیاہے۔ 
 
 ڈان اخبارمیں شائع خبرکےمطابق حکومت اوراس کےاتحادیوں میں اختلافات اس وقت بڑھےجب وزیراعظم عمران خان نےاچانک مسلم لیگ ق اورایم کیوایم پاکستان سےجہانگیرترین کی سربراہی میں مذاکرات کرنےوالی حکومتی کمیٹی کوتحلیل کرکےنئی کمیٹی تشکیل دےدی ۔ خبرکےمطابق پہلی مذاکراتی کمیٹی کوتحلیل کرنےکےپیچھےدراصل وہ شکایات تھیں جوخودتحریک انصاف کےاندرسےجہانگیرترین کےخلاف سامنےآرہی تھیں کیونکہ پی ٹی آئی کےکچھ رہنمائوں کےخیال میں جہانگیرترین اتحادیوں سےمذاکرات کےدوران حکومت سےزیادہ اتحادیوں کےمفادات کےتحفظ میں مصروف تھے۔ خبرمیں ایک پی ٹی آئی لیڈرکےحوالےسےبتایاگیاہےکہ ایساشایدپہلی بارہواہےکہ عمران خان نےجہانگیرترین کےخلاف شکایات کوسنجیدگی سےسنااوران کاموقف سنےبغیرکمیٹی تحلیل کردی ۔ 
یہ بھی پڑھیں ۔۔
 جہانگیرترین کےخلاف شکایات کرنےوالےپارٹی رہنمائوں نےعمران خان کوبتایاکہ مذاکرات کےدوران جہانگیرترین نےق لیگ کےتقریباً سارےمطالبات نہ صرف مان لئےبلکہ ڈی فیکٹوچیف منسٹرکی طرح ان مطالبات پرعملدرآمدکیلئےاحکامات بھی جاری کرتےرہے۔ تحریک انصاف میں موجود چودھریوں کےمخالف دھڑےنےعمران خان کواس بات پرقائل کرلیاکہ چودھری چالاک سیاستدان ہیں اس لئےتحریک انصاف کوبھی اپنی چالیں چالاکی سےچلنی چاہیئں ۔ خبرکےمطابق عمران خان اس سب باتوں پراس لئےنسبتاً جلدی قائل ہوگئےکیونکہ اندرسےوہ خودبھی چودھریوں پرزیادہ بھروسہ نہیں کرتے ۔
یہ بھی پڑھیں ۔۔
 پنجاب کی طرح پی ٹی آئی سندھ کےرہنمابھی جہانگیرترین کی ایم کیوایم رہنمائوں کیلئےسخاوت پردل سےخوش نہیں تھے۔ اسی وجہ سےوزیراعظم عمران خان نےجہانگیرترین کی سربراہی میں حکومتی مذاکراتی کمیٹی کوتحلیل کرکےنئی کمیٹیاں تشکیل دےدیں ۔ اب جونئی کمیٹی مسلم لیگ ق سےمذاکرات کرےگی اس کےسربراہ گورنرپنجاب چودھری سرورہونگے جبکہ ارکان میں وزیراعلیٰ عثمان بزداراوروفاقی وزیرشفقت محمود ہونے ۔ ایم کیوایم پاکستان سےجوکمیٹی اب مذاکرات کرےگی اس کےسربراہ گورنرسندھ عمران اسماعیل ہونگے جبکہ اس کےارکان میں سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈرفردوس شمیم نقوی اورایم پی اےحلیم عادل شیخ شامل ہیں ۔  

Copyright © 2018 News Makers. All rights reserved.