News Makers

شہبازشریف :-اپوزیشن لیڈرشہبازشریف کی جانب سےلیگی کارکنوں پرپولیس تشددکی مذمت
شہبازشریف :-لیگی کارکنوں پر تشددنیب نیازی گٹھ جوڑ کی بدترین مثال ہے ، شہبازشریف
بلاول بھٹو :-پی پی چیئرمین بلاول بھٹوکی جانب سے لیگی کارکنوں پرپولیس تشدد کی مذمت
نوازشریف :-نوازشریف کا مریم نوازکوٹیلی فون ، خیریت دریافت کی
نوازشریف :-نوازشریف کی پولیس تشددسےزخمی کارکنوں کی عیادت کی ہدایت

تازہ ترین

کورونا وائرس پاکستان میں مصدقہ کیسز
285191
  • اموات 6112
  • سندھ 124127
  • پنجاب 94586
  • بلوچستان 11921
  • خیبرپختونخوا 34755
  • اسلام آباد 15281
  • گلگت بلتستان 2371
  • آزاد کشمیر 2150

 

کوروناوائرس : جنوبی کوریانےمہلک وباپرکیسےقابوپایا؟

کوروناوائرس : جنوبی کوریانےمہلک وباپرکیسےقابوپایا؟
اپ لوڈ :- جمعہ 20 مارچ 2020
ٹوٹل ریڈز :- 161

ویب ڈیسک ۔۔
 
ان حالات میں جب کوروناوائرس جیسی مہلک وباانتہائی تیزرفتاری سےدنیابھرکواپنی لپیٹ میں لیتی جارہی ہے،ایک ملک ایسابھی ہےجس نےاتنی ہی تیزرفتاری  سےاس وباپرقابوپایاہےیاپانےکی قریب ہے۔ جی ہم بات کررہےہیں جنوبی کوریاکی جہاں حیران کن طور پرگزشتہ 2 ہفتوں سے نئے کیسز سامنے آنے کی رفتارانتہائی کم ہوچکی ہے۔
 
فروری کے آخراور مارچ کے آغاز پرجنوبی کوریا سے کورونا کیسز سامنے آنے کی رفتار سب سے زیادہ تھی اور چین کے بعد جنوبی کوریا ہی سب سے زیادہ متاثرہ ملک تھا لیکن پھرایران سامنے آیا اور وہاں تیزی سے نئے کیس سامنے آنے لگے۔ 
 
مارچ کے پہلے ہفتے تک جنوبی کوریا میں کورونا وائرس تیزی سےپھیل رہاتھا لیکن مارچ کے دوسرے ہفتے کے آغاز میں صورتحال میں ایک حیرت انگیزتبدیل آئی اور دیکھتے ہی دیکھتے جنوبی کوریا سے نئے کیسز کے آنے کی رفتارکوجیسےکسی نےبریک لگادئیےہوں۔۔
 
یوں محض چند ہفتوں میں جنوبی کوریا نےوبا کے تیزی سے پھیلنے پر قابو پالیا اور17 مارچ کے دن جنوبی کوریا سے مجموعی طور پر 50 سے بھی کم نئے کیسز سامنے آئے تھے، اس سے قبل فروری کے اختتام تک وہاں سے یومیہ 700 سے 900 کیسز سامنے آ رہے تھے۔
 
ماہرین کامانناتھا کہ چین کے کسی بھی دوسرے ملک کو کورونا وائرس کی وبا پر قابو پانے میں بہت وقت لگے گا مگر جنوبی کوریا نے چین سے بھی کم وقت میں وائرس پر قابو پاکر تمام اندازوں کو غلط ثابت کیا۔
 
 
جنوبی کوریانےکوروناوائرس پرکیسےقابوپایا؟ 
 
طبی تحقیقاتی جریدے سائنس میگ کےایک مضمون میں ان چند اقدامات کا ذکر کیا گیا ہےجنہیں اختیار کرکے جنوبی کوریا نے وبا پر قابو پایا۔
 
مضمون میں بتایا گیا کہ جنوبی کوریا نے دیگر کئی ممالک کی طرح بڑے پیمانے پر لاک ڈون بھی نہیں کیا اور نہ ہی تمام شہریوں کو گھروں میں بند کیا لیکن اس کے باوجود وہاں کی حکومت کورونا جیسی وبا پرقابو پانے میں کامیاب ہوگئی۔
 
رہورٹ میں بتایاگیاہےکہ جنوبی کوریا نے وبا سے نمٹنے کے لیے اس وقت ہی تیاریاں شروع کردی تھیں جب مذکورہ وائرس صرف چین تک محدود تھا۔
 
جنوبی کورین حکام کے مطابق چین میں تیزی سے وبا کے پھیلنے کے بعد وہاں کی فارماسیوٹیکل کمپنیوں نے حکومت کے ساتھ مل کر کورونا وائرس کا ٹیسٹ کرنے والی کٹ کی تیاری کرنا شروع کردی تھی۔
 
رپورٹ میں بتایا گیا کہ جنوبی کورین ماہرین نے چینی ماہرین کی جانب سے کورونا وائرس کے حوالے سے شائع کی جانے والی معلومات اور تحقیقات کا تجزیہ کرکے نہ صرف کم وقت میں معیاری کٹس کی تیاری کرلی بلکہ انہوں نے دیگر انتظامات کے حوالے سے بھی منصوبہ بندی مکمل کرلی۔
 
 
ایک اوررپورٹ کے مطابق بظاہرجنوبی کورین حکومت نے کورونا وائرس کی کٹ تیار کرنے، قرنطینہ کا بہترین نطام بنانے اور ٹیکنالوجی کا استعمال کرکے عالمی وبا کو پھیلنے سے روکا۔
 
حکام نے بتایا کہ لاک ڈاؤن کرنا یا لوگوں کو گھروں تک محدود کرنا مسئلے کا حل نہیں تھا اس لیے حکومت نے کم وسائل اور کٹ کے ساتھ زیادہ سے زیادہ افراد کے ٹیسٹ کرنے کو یقینی بنانے سمیت قرنطینہ کے نظام کو بہتر بنایا اور قرنطینہ میں ہر اس شخص کو بند کردیا گیا جس کی صحت کے حوالے سے تھوڑا سا بھی شبہ تھا۔
 
جنوبی کورین حکام کے مطابق انہوں نے قرنطینہ کے نظام کوجدید ٹیکنالوجی کے ساتھ منسلک کردیا اور قرنطینہ کے ایپس اور جی پی ایس سسٹم کے ذریعے نگرانی کی گئی تاکہ وہاں سے کوئی نکل نہ سکے اور وہاں کوئی غیرمتعلقہ شخص جا نہ سکے۔
 
جنوبی کورین حکام کے مطابق اس بات کو بھی جدید ٹیکنالوجی اور ایپس کی مدد سے یقینی بنایا گیا کہ شہریوں کو موبائل فون پر پیغامات بھیجے جائیں کہ فلاں فلاں علاقوں میں جانے سے گریز کیا جائےاوریہ بھی کی وہ کیسےاپنےآپ کومحفوظ رکھ سکتےہیں۔
 
 جنوبی کوریا کے ایئرپورٹس پر بھی نگرانی کا بہتر نظام بنا کر اسے ٹیکنالوجی کے ساتھ منسلک کردیا گیا اور ہر مسافر کی کڑی نگرانی کرنے سمیت اسے محفوظ رہنے اور محفوظ جگہ پر پہنچنے کے ایپس کے ذریعے طریقے بھی بتائے گئے۔
 
اگرچہ جنوبی کوریا کےحکام کورونا وائرس کے خلاف اپنی جدوجہد کو کامیابی نہیں سمجھتے تاہم دنیا کے دیگر ممالک کے ماہرین کا ماننا ہے کہ جنوبی کوریا وبا پر قابو پانے میں کامیاب ہوگیا۔
------------

Lessons from China and South Korea

 

Copyright © 2018 News Makers. All rights reserved.