News Makers

تازہ ترین

کورونا وائرس پاکستان میں مصدقہ کیسز
251492
  • اموات 5264
  • سندھ 105533
  • پنجاب 87043
  • بلوچستان 11185
  • خیبرپختونخوا 30486
  • اسلام آباد 14023
  • گلگت بلتستان 1658
  • آزاد کشمیر 1564

 

شہبازشریف ایسے ہی ہیں

شہبازشریف ایسے ہی ہیں
اپ لوڈ :- سوموار 12 اکتوبر 2019 اپ ڈیٹ :- سوموار 14 اکتوبر 2019
ٹوٹل ریڈز :- 281

انتہائی بدترین سیاسی حالات میں جب تحریک انصاف کی حکومت اور نیب ن لیگ کی قیادت کو بدنام کرنےاورانہیں جیل میں ڈالنےکاکوئی موقع ہاتھ سےجانےنہیں دے رہے، شہبازشریف کامصالحانہ رویہ مسلم لیگ ن کےچاہنےوالوں کوایک آنکھ نہیں بھارہا۔ شہبازشریف اس قسم کا مصالحانہ یادوسرےلفظوں میں بزدلانہ رویہ کیوں دکھارہےہیں، سیاسی تجزیہ نکاروں کےنزدیک ہمیشہ اسٹیبلشمنٹ کےساتھ بناکررکھنےوالےشہبازشریف آج بھی اسی شجرسےپیوستہ بہارکی امیدلگائےبیٹھےہیں ۔ انہیں لگتاہےکہ جیسےاچانک سےکوئی بنددروازہ کھلےگااورانہیں اندربلالیاجائےگا۔ شایدشہبازشریف کولگتاہےکہ کم ازکم پنجاب کی حدتک تحریک انصاف کی بدترین کارکردگی ایک روزاسٹیبلشمنٹ کومجبورکردےگی کہ وہ ملک کاسب سےبڑاصوبہ ایک بارپھرانکےحوالےکردیں ۔ حقیقت کی آنکھ سےدیکھیں توفی الحال دوردورتک ایساہوتادکھائی نہیں دیتالیکن شہبازشریف امیدلگائےبیٹھےہیں توہم بھی انکےلئےدعاگوہیں ۔
 
شہبازشریف نےایک متحرک، منظم اورکام کرکےدکھانےوالےوزیراعلی کےطورپرنہ صرف اندرون ملک بلکہ بیرون ملک بھی اپنانام بنایاہے۔ ان کےکام کی رفتارکودیکھتےہوئےچین والوں نےانہیں پنجاب سپیڈکاخطاب دیا۔ بطوروزیراعلی انہوں نےپنجاب میں مثالی کام کرکےدکھائےاورالیکشن میں ن لیگ کی کامیابی میں انکےکئےہوئےکاموں نےیقینی طورپراہم کرداراداکیا ۔ 
 
یہ سب کارنامےاپنی جگہ لیکن یہاں ایک سوال پیداہوتاہے۔۔ 
 
کیاسیاست صرف حکومت کرنےکانام ہے؟کیاسیاست صرف ترقیاتی منصوبےلگانےکانام ہے؟
 
افسوس سےکہناپڑتاہےکہ بطوروزیراعلی شہبازشریف نےجونام کمایاتھاوہ اپوزیشن لیڈربنتےہی انہوں نےگنوادی ہے۔ آج ن لیگ کےاندراورباہرلوگ ان کےکاموں کونہیں بلکہ ان کےموجودہ مفاہمانہ اورمصالحانہ کردارپرانگلیاں اٹھارہےہیں ۔ 
 
یہاں بلاول بھٹوکی بات نہ کرناناانصافی ہوگی  جنہوں نےبغیرمائیک بھی قومی اسمبلی میں حکومت کووخت ڈال رکھاہےجبکہ شہبازشریف کی زبان مائیک کھلاہونےکےباجودکسی کھونٹےسےبندھی محسوس ہوتی ہے۔ 
 
پتانہیں شہبازشریف بزدل ہیں ، مصلحت پسند یاصلح جو؟ لیکن وہ جوبھی ہیں ایسے ہی ہیں ۔ 
 
میں شہبازشریف کےحوالےسےایک ذاتی تجربہ شئیرکرناچاہتاہوں ۔۔ 
 
اپنی بیماراہلیہ کوبسترمرگ پرچھوڑکرنوازشریف اپنی بیٹی مریم کےہمراہ لندن سےگرفتاری دینےلاہورآرہےتھے۔ اسی روزمسلم لیگ ن نےاپنےقائدسےاظہاریکجہتی کیلئےریلی نکالنےکافیصلہ کیا،تاکہ ائیرپورٹ پراترتےہی ان کاشایان شان استقبال کیاجاسکے۔ میں اورمیرےایک دوست عرفان اسلم بھی اس ریلی میں شریک تھے۔ دوپہردوبجےہم لوگ لوہاری سےاس ریلی میں شریک ہوئےاورمختلف راستوں سےہوتےہوئےرات آٹھ یانوبجےکےقریب جوڑےپل کےقریب پہنچےجہاں پہلےسےہی لیگی متوالوں اوررینجرزوالوں کےدرمیان پتھراو اورآنسوگیس کاتبادلہ چل رہاتھا۔ فضامیں آنسوگیس کی بوجابجاپھیلی ہوئی علاقےکی کشیدہ صورتحال اورایک عجیب سےخوف کاپتادےرہی تھی ۔ پیاس کےمارےمیں اورعرفان ایک پان کی دکان پررکےاورٹھنڈی بوتل سےپیاس بجھانےکےساتھ ساتھ حالات کاجائزہ لینےلگے۔ 
 
 
اس جگہ ہم کافی دیرتک شہبازشریف کاانتظارکرتےرہےلیکن وہ نہ آئے،البتہ خواجہ سعد رفیق ، خواجہ آصف اورسردارایازصادق کوہم نےوہاں دیکھا۔ انتظارحدسےزیادہ طویل ہواتوہم نےواپسی کی ٹھانی اورگرتےپڑےدھرمپورپل پرپہنچےتووہاں لوگوں کاایک جم غفیردیکھا،مختلف نیوزچینلزکی ڈی ایس این جیزبھی تیارکھڑی تھیں ۔ پتاچلاکہ شہبازشریف یہاں لوگوں سےخطاب کرینگے۔ ہم بھی رک کرانتظارکرنےلگے۔ کچھ دیربعدشہبازشریف اپنی سفیدلینڈکروزرمیں وہاں پہنچےاورگاڑی کےاندرسےہی انتہائی مختصرخطاب کرکےچلتےبنے۔ ہم لوگ اپناسامنہ لیکرپریس کلب واپس آگئے۔
 
آج جب میں شہبازشریف کی طرزسیاست پرایک نظرڈالتاہوں تومجھےیہ واقعہ یادآگیا،سوچاآپ سےشئیرکرلوں تاکہ جو لوگ نہیں جانتےوہ بھی جان لیں کہ : شہبازشریف ایسےہی ہیں ۔۔ 

Muhammad Zaheer

The author is a journalist. He is currently working for a news channel.

Muhammad Zaheer مزید تحریریں

Muhammad Zaheer

Copyright © 2018 News Makers. All rights reserved.